غزل

گردشِ جاں میں رہے چاند ستارے یارو ہم نے ایسے بھی کئی دور گزارے یارو ہم نے رکھا ہی نہیں … More