ہزارہ کے ہزار غم اور پھیکی عید_______ثروت نجیب

اُس نے کہا تھا : کون کمبخت آنسو لکھنا چاہتا ہے ۔ قلم کو نوک جب قرطاس کی پیشانی چومتی … More